بابائے بروشسکی علامہ نصیرالدین ہنزائی کو ان کے آبائی گاؤں میں سپرد خاک کر دیا گیا


Allamah Nasir Hunza funeral

بابائے بروشسکی پروفیسر ڈاکٹر علامہ نصیرالدین ہنزائی کو ہزاروں لوگوں کی موجودگی میں اپنے آبائی گاوٗں حیدر آباد میں سپرد خاک کردیا گیا۔ مرحوم کی نماز جنازہ قاری شمس نے پڑھائی۔ مرحوم ۱۵ جنوری کو بوسٹن امریکہ میں انتقال کرگئے تھے۔ مرحوم کے وصیت کے مطابق انکی تدفین انکے آبائی گاوٗں حیدر آباد ہنزہ میں عمل میں لائی گئی ۔

پروفیسر ڈاکٹر علامہ نصیرالدین ہنزائی حیدر آباد گاوں میں ہی 1917کو پیدا ہوئے تھے۔ مرحوم بروشسکی زبان کے صاحب دیوان شاعر اور تقریبا 100سے زائد کتابوں کے مصنف تھے۔ اسکے علاوہ بروشسکی ڈکشنری کے تین جلد بھی آپ کی کوششوں سے منظر عام پر آچکے ہیں۔

Allamah Nasir Hunzai

مرحوم کے نماز جنازہ میں ارباب زوق گلگت کے نمائندوں جناب عبدالخالق تاج ،جناب شیر باز برچہ اور معروف شاعر جمشید خان دکھی نے بھی شرکت کی۔ انکے علاوہ سابقہ اسپیکر جی بی ایل اے جناب وزیر بیگ ،مشہور کوہ پیماہ نذیر صابر اور نگر کے مشہور عالم دین شیخ محمد تقی عابدی امام جمعہ والجماعت ہوپر نگر کے علاوہ ہزاروں افراد نے شرکت کی ۔

نمازہ جنازہ کے موقعے پر خطاب کرتے ہوئے عبدالخالق تاج نے حلقہ ارباب زوق گلگت کی نمائندگی کرتے ہوئے مرحوم کے علمی و ادبی خدمات کو خراج تحسین پیش کی۔ اس موقعے پر بات کرتے ہوئے شیرباز برچہ نے انکی عملی خدمات اور خاص کر بروشسکی زبان و ادب کے حوالے سے بات کرتے ہوئے کہا کہ علامہ نے جو ڈکشنری کی شکل میں بروشسکی زبان کیلئے ایک انمول تحفہ ہے ۔

گلگت بلتستان کے مشہور قومی شاعر جمشید خان دکھی نے  مرحوم علامہ نصیرالدین ہنزائی کیلئے اپنا ایک اردو نظم پیش کرکے خراج تحسین پیش کیا اور بلتستان کے اہل قلم کی جانب سے بھی تعزیت پیش کی ۔

Allamah Nasir Hunzai
سابقہ اسپیکر وزیر بیگ نے علامہ نصیرالدین ہنزائی کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ علامہ کی زندگی، جو  کہ سو سال پر محیط ہے، کا تمام حصہ مرحوم نے علم کی فروغ میں تمام کی ہے۔ علامہ مرحوم نے بروشسکی زبان و ادب کے ساتھ ساتھ علم کی روشنی پھیلانے میں نہایت اہم کردار ادا کیا ہے جو ہمیشہ یاد رکھا جائیگا ۔

علامہ نصیرالدین ہنزائی کے فرزند اور ہنزہ کے مشہور سیاسی و سماجی شخصیت اظہار ہنزائی نے نماز جنازہ میں شریک افراد کا شکریہ اد ا کرتے ہوئے کہا کہ میں اور میرا خاندان حکومتی اداروں، گلگت بلتستان حکومت،  خیبر پختوخواہ حکومت اور ضلعی انتظامیہ کے مشکور ہیں جنہوں نے مرحوم کی جسد خاکی کو ہنزہ پہنچانے میں ہماری مدد کی۔ انھوں نے مزید کہا کہ ہنزہ کے کمیونیٹی اور تمام ملک و بیرون ملک سے آئے ہوئے مہمانوں کا مشکور ہوں ۔

اس آرٹیکل کو انگریزی میں پڑھنے کے لیے یہاں کلک کریں


Gbee Staff
Gbee Staff bring you the latest and trending topics from Gilgit-Baltistan and Chitral. Like us on Facebook and Follow us on Twitter.

Comments 1

Your email address will not be published. Required fields are marked *

لاگ ان کریں

Don't have an account?
سائن اپ کریں

reset password

سائن اپ کریں

Choose A Format
Story
List
Meme
Video
Audio
Image